وزیر اعظم عمران خان نے 19 اکتوبر 2020 کو کلین گرین پاکستان انڈیکس آف پنجاب اور کے پی کے کے حوصلہ افزائی کے پروگرام کے تحت نمایاں کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے شہروں کا اعلان کیا ہے۔ اٹک ، بہاولپور ، لاہور ، گجرات اور راولپنڈی کے پی کے کے لئے: بنوں ، کوہاٹ اور پشاور کو تسلیم کرلیا گیا ہے۔
ہمیں فالو کریں

کلین گرین چیمپیئن پروگرام (سی جی سی پی)


  • ہوم
  • کلین گرین چیمپیئن پروگرام (سی جی سی پی)

کلین گرین چیمپیئن پروگرام (سی جی سی پی)

کلین گرین پاکستان موومنٹ (سی جی پی ایم) کے تحت ایک اہم پروگرام جس کا آغاز جناب عمران خان وزیر اعظم پاکستان نے 15 نومبر 2019 کو کیا تھا تاکہ اس قومی کاوش کے لئے شہری اداروں کو شہریوں کی مدد اور حمایت کو یقینی بنایا جاسکے۔ سی جی سی پی شہروں کو صاف ستھرا رکھنے ، شہری سہولیات کو بہتر بنانے اور ان میں اپنی رہائش گاہوں اور شہروں کو اپنانےکا جذبہ اور احساس پیدا کرنے کے لئے رضاکارانہ طور پر شہریوں کی شرکت کے لئے ڈیزائن کیا گیا ہے۔ کلین گرین چیمپیئن بننے کے خواہشمند پاکستان کا کوئی بھی شہری صاف سبز پاکستان موومنٹ کے مندرجہ ذیل کلیدی پانچ ستونوں کے تحت سرگرمیوں میں حصہ لینے کے لئے رضاکارانہ خدمات انجام دے گا.

کلین گرین چیمپیئن - کردار کی تفصیل

رضاکاروں کا کردار

پاکستان کا کوئی بھی شہری جوکلین گرین چیمپیئن بننے کا خواہشمندہو صاف سبز پاکستان تحریک کے مندرجہ ذیل پانچ ستونوں کے تحت سرگرمیوں میں حصہ لینے کے لئے رضاکارانہ طور پر کام کرے گا۔

حفظانِ صحت

  • ضروری اوقات میں اور بیرونی سطحوں کو چھونےکے بعد صابن یا سینی ٹائزر سے ہاتھ دھوئیں۔ انفیکشن کے خطرے کو کم کرنے کے لئے پیروں کی مددسے چلنے والے یا خود کار طریقے سے ہاتھ دھونے والے اسٹیشنوں/مراکز کو نصب کرکےاپنی، گھر ، علاقے کی حفظان صحت کو یقینی بنایا جائے۔اس کے علاوہ خوراک اور ماحول سے متعلق حفظان صحت کے طریقوں کو وائرس کے خلاف احتیاطی تدابیر کے طور پر اپنایا جائے۔

محفوظ صفائی ستھرائی / سینی ٹیشن

  • گھروں / بازاروں / عوامی مقامات پر لیٹرینوں کی صفائی ستھرائی اور دیکھ بھال
  • لیٹرینوں کی تعمیر اور استعمال کو ا ُن کمیونٹی میں جہاں کھلی جگہیں رفع حا جت کے لئے استعمال ہوتی ہیں فروغ دینا
  • کمیونٹی کو لیٹرینوں کے مناسب قسم کے کنیکشن، فضلہ کی آ ن سائٹ اور آف سائٹ انتظام کاری کے لیےآگاہی اور متحرک کریں۔
  • ناقص صفائی کے صحت اورکورونا وائرس کے پھیلاؤ کے اثرات سے متعلق آگاہی دیں۔
  • ڈس انفیکشن کے لئے ممکنہ مقامات کی شناخت کریں ،مثال کے طورپر پھٹےہوئے گٹر کے پائپ ۔

ٹھوس فضلے کا انتظام

  • خاندان کے افراد اور محلے کی کمیٹیاں ٹھوس فضلہ اکٹھا کرنے ، الگ کرنے اور مختص جگہوں پر ٹھکانےلگانے کے عمل کی قیادت کریں۔
  • کورونا وائرس کی روک تھام کے لئے کمیونٹی اور گھریلو سطح پر ٹھوس فضلے کی انتظام کاری (جیسے استعمال کردہ ماسک اور دستانوں کی مناسب تلفی) کے بارے میں آگاہی دیں

محفوظ پانی

  • پانی کو صاف ،قابل ِ استعمال اور محفوظ بنائیں ،کورونا وائرس کے پیشِ نظر آبی وسائل کا جائز استعمال کریں ۔
  • گرے/سرمئی پانی اور بارش کے پانی کو جمع اور ری سائیکل کریں ۔
  • گھروں میں پانی کی ٹریٹمنٹ کے طریقہ کار پر عوام کو آگاہ کریں

شجرکاری

  • مختلف قسم اور وقت پر متعلقہ علاقوں ، بازاروں ، کام کے مقامات اور مکانوں میں پودے لگانےسے ماحول بہتر، حیاتیاتی تنوع اور کورونا وائرس سے لڑنے میں مدد ملتی ہے ۔


مزید پڑھیں

سکور اور انعامات کا نظام

صاف سبز پاکستان تحریک میں پاکستان کے شہریوں کی رضاکارانہ طور پر شرکت کی حوصلہ افزائی کے لئے پوائنٹس اور دیگر فوائد کا ایک نظام تیار کیا گیا ہے۔ ہر ایک سرگرمی کے لیےرضاکار کو ایک مقررہ اسکور / پوائنٹ دیا جائے گا ، اور حاصل کردہ پوائنٹس کی بنیاد پر کلین گرین چیمپیئن کو پانچ ستونوں کی بنیاد پر درجہ دیا جائے گا۔

image


مزید پڑھیں
کلین گرین کمپین

تعلیمی اداروں کو شامل کریں

وفاقی وزارت موسمیاتی تبدیلی نے صاف سبز پاکستان تحریک میں شریک ہونے والے تمام شہروں کے تعلیمی اداروں کی موثر شمولیت کے لئے رہنما اصول مرتب کیے ہیں۔ ہدایت نامہ میں پاکستان کو صاف ستھرا اور سبز بنانے میں اساتذہ اور طلبہ کی رضاکارانہ شمولیت کے لئے یونیورسٹیوں ، کالجوں اور سکولوں کا واضح کردار متعین کیا گیا ہے۔

image
image

یونیورسٹیوں کے لئے رہنما اصول

ہر یونیورسٹی میں صاف سبز پاکستان کے لئے ایک اسٹیئرنگ کمیٹی تشکیل دی جائے ...

مزید پڑھیں
image
image

کالجوں کے لئے رہنما اصول

ہر کالج میں کلین گرین پاکستان کے لئے ایک اسٹیئرنگ کمیٹی تشکیل دیں (بشمول وائس چانسلر ، 2-3 اساتذہ اور صدر ...

مزید پڑھیں
image
image

اسکولوں کے لئے رہنما اصول

ہر اسکول میں کلین گرین کلب تشکیل دیں (ہیڈ ٹیچر ، کلین گرین کلب کے 2-3 اساتذہ اور طالب علمی کے سربراہ سمیت) ...

مزید پڑھیں